21 اپريل, 2014 | 20 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کراچی سانحہ: ذمہ داروں کے خلاف قتل کا مقدمہ

کراچی: آتشزدگی سے متاثرہ عمارت کا اندرونی منظر۔— اے ایف پی

کراچی: کراچی پولیس نے ایک گارمنٹ فیکٹری میں آتشزدگی کے نتیجے میں کم از کم 250 ہلاکتوں کے بعد جمعرات کو فیکٹری مالکان اور حکومتی عہدے داروں کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔

منگل کی شام سائیٹ کے علاقے میں واقع علی انٹرپرائزز گارمنٹ فیکٹری میں آگ لگنے سے ملازمین کی بڑی تعداد جلھسنے اور دم گھٹنے کے باعث ہلاک ہو گئی تھی۔

ایک سرکاری عہدے دار نے خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ فیکٹری مالکان کے ملک سے باہر جانے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

مقامی پولیس اسٹیشن کے محمد نواز گوندل نے جمعرات کو بتایا کہ انہوں نے فیکٹری مالکان اور حکومتی عہدے داروں کے خلاف ملازمین کے تحفظ کے حوالے سے انتہائی غفلت برتنے پر قتل کا مقدمہ درج کیا ہے۔

گوندل نے مزید بتایا کہ مقدمہ میں عبدالعزیز، محمد ارشد، شاہد بھائیلا اور فیکٹری انتظامیہ کے دیگر ارکان کو ملزمان نامزد کیا گیا ہے۔

کراچی پولیس کے ایک سینئر افسر نعیم اکرم نے مقدمہ کے اندارج کی تصدیق کی ہے۔

پولیس منگل کو پیش آنے والے واقعے کے بعد سے روپوش فیکٹری مالکان کی تلاش میں ہے۔

دوسری جانب، سندھ حکومت نے سابق جج پر مشتمل ایک کمیشن بھی بنادیا ہے۔

ڈان نیوز نے کمشنرکراچی کے حوالے سے بتایا کہ متاثرہ عمارت میں ریسکیو آپریشن مکمل کرلیا گیا ہے۔

کراچی میں آگ بجھانے والے عملے کے سربراہ نے عمارت کو انتہائی خطرناک قرار دیتے ہوئے بتایا کہ اس کی تلاشی کا کام مکمل ہو گیا ہے۔

اس حصے سے مزید

کراچی پُرتشدد واقعات میں پانچ افراد ہلاک

اسی دوران شہر میں رینجرز اور پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے کم از کم بارہ مشتبہ افراد کو حراست میں لے لیا۔

ای سی ایل سے متعلق مشرف کی سندھ ہائی کورٹ میں درخواست

درخواست میں کہا گیا کہ مشرف اپنی والدہ سے ملنے دبئی جانا چاہتے ہیں، لہٰذا ان کا نام ای سی ایل سے خارج کیا جائے۔

کندھ کورٹ: مسافر بس الٹنے سے چھ مسافر زخمی

یہ حادثہ ضلع کندھ کوٹ کے قریب غوثپور کے مقام پر پیش آیا، جبکہ زخمیوں کو قریبی پسپتال منتقل کردیا گیا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

'اقبال اور 'تصور اقبال

اقبال کا سب سے بڑا المیہ یہ ہے کہ جس کسی نے کلام اقبال سے جو نکالنا چاہا، اسے مل گیا

نریندر مودی اور نواز شریف ساتھ ساتھ

اگر بی جے پی حکومت بنانے میں کامیاب ہوتی ہے تو 1998 کی طرح آج بھی پاکستان میں نواز شریف کی ہی حکومت ہوگی۔

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-