03 ستمبر, 2014 | 7 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

نااہل اراکین اسمبلی کی رکنیت معطل

۔— اے پی پی فوٹو

اسلام آباد: پاکستان کی سپریم کورٹ نے ایسے تمام ارکان اسمبلی کو نااہل قرار دے دیا ہے جو دہری شہریت رکھتے ہیں۔

اس اقدام کے بعد الیکشن کمیشن آف پاکستان نے سپریم کورٹ کے احکامات کے تحت ان تمام گیارہ اراکین کی قومی و صوبائی اسمبلی سے رکنیت معطل کردی ہے۔

چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی سربراہی میں تین  رکنی بنچ نے جمعرات کو مقدمہ کا محفوظ شدہ فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ  ایسے تمام ارکان اسمبلی کسی بھی عوامی عہدے کےاہل نہیں ہیں۔

عدالتی فیصلہ کے بعد گیارہ اراکین قومی و صوبائی اسمبلی نااہل ہو گئے ہیں۔ ان میں فرح ناز اصفہانی (پی پی پی) ، نادیہ گبول ( ایم کیو ایم) ، ڈاکٹراشرف چوہان (ن لیگ)، وسیم قادر( ن لیگ)، فرحت محمد خان (ایم کیو ایم)،  احمد علی شاہ ( پی پی پی)، آمنہ بٹر (پی پی پی)، محمد اخلاق خان (ن لیگ)، ندیم خادم (ن لیگ)، زاہد اقبال (پی پی پی) اور ملک جمیل اعوان ( ن لیگ) شامل ہیں۔

نااہل قرار دیے جانے والے اراکین میں سے چار کا تعلق قومی اسمبلی، پانچ کا تعلق پنجاب جبکہ دو کا سندھ  اسمبلی سے ہے۔

سپریم کورٹ نے ان اراکین کو تریسٹھ ون سی کے تحت نااہل قرار دیتے ہوئے اپنے فیصلے میں کہا کہ ان کے خلاف حلف میں غلط بیانی پر تعزیرات پاکستان کے تحت کارروائی ہوگی۔

عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ آرٹیکل 62 اور 63 کی زد میں آنے والے اراکین پارلیمنٹیرین نہیں رہ سکتے۔

عدالت نے قومی و صوبائی اسمبلیوں کے اسپکیرز اور چیئرمین سینٹ کو فیصلے کی نقول بھجوانے کی ہدایت دیتے ہوئے الیکشن کمیشن کو ان پالیمنٹیرین کے خلاف کاروائی کا حکم دیا ہے۔

عدالت نے رحمان ملک اور نااہل قرار دیے گئے تمام ارکان کو مراعات اور تنخواہیں سرکاری خزانے میں جمع کرانے کا حکم دیتے ہوئے سیکرٹری سینیٹ و قومی اسمبلی کو دو ہفتوں میں رپورٹ پیش کرنے کا حکم بھی دیا۔

دوسری جانب، وفاقی وزیر داخلہ رحمان ملک کے خلاف سینیٹ انتخابات کے وقت غلط حلف نامہ جمع کروانے پر بھی کارروائی کا حکم دیا گیا۔

سپریم کورٹ کے مطابق رحمان ملک نے غلط بیانی کی لہٰذا وہ صادق اور امین نہیں رہے، ان کے خلاف فوجداری مقدمہ قائم کرتے ہوئے چئیرمین سینیٹ کو ریفرنس بھجوایا جائے۔

عدالت کے مطابق رحمان ملک نے سینیٹ کے 2008 انتخابات میں الیکشن قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے غلط حلف نامہ جمع کرایا تھا۔

اس حصے سے مزید

مناسب خوراک کی کمی اور تھکاوٹ انقلابیوں پر اثرانداز ہونے لگی

یہ بدقسمتی ہے کہ یہ احتجاجی مظاہرین اس طرح کے مضر صحت ماحول میں رہنے پر مجبور ہیں۔

برطانیہ کا شہریوں کو پاکستان کے سفر پر انتباہ

سفارت کار، سرکاری وفود اور شہریپاکستان کے اپنے سفر پر نظرثانی کریں، دفتر خارجہ و کامن ویلتھ۔

آصف زرداری ملکی سیاسی بحران کے حل میں کردار ادا کرنے کے خواہشمند

آصف علی زرداری نے وفاقی دارالحکومت میں قیام کرکے صورتحال کو حل کرنے کے لیے کردار ادا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

SMIQBAL
20 ستمبر, 2012 09:24
well done these 'criminals' must be treated heavy handedly.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماڈل ٹاؤن کیس: کچھ حماقتیں

حکمرانوں کے منع کرنے پر پولیس کی جانب سے مقتولین کی ایف آئی آر درج کرنے میں تاخیر کی وجہ سے معاملہ مزید خراب ہوا۔

بیوروکریٹس کی یونین

ذاتی مفادات کے لیے چوری چھپے سیاسی ہونے سے زیادہ بہتر ہے کہ ریاست کے وسیع تر مفاد کے لیے کھلے عام سیاسی ہوا جائے۔

بلاگ

ڈرامہ ریویو: 'لا'...الجھتے رشتوں کی کہانی

ڈرامہ پرفیکٹ نہیں بھی تھا تو بھی یہ ان ڈراموں میں سے ایک ضرور تھا جسے دیکھ کر بیزاری کا احساس نہیں ہوتا۔

مووی ریویو : 'راجہ نٹور لال' سٹیریو ٹائپنگ کا شکار ہوگئی

یہ فلم نہ تو مزاح پر پوری اترتی ہے اور نہ ہی اس میں اتنا تھرلر ہے جو اسے ذہن میں نقش کر دے۔

سستا خون: براۓ انقلاب

"انقلاب" سیاست چمکانے کے لیے ایک خوشنما لفظ بن چکا ہے، اور اسے مزید چمکانے کے لیے کارکنوں کا سستا خون بھی دستیاب ہے۔

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔