25 جولائ, 2014 | 26 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

دہشت گردانہ کارروائیاں فنڈنگ کے بغیر نہیں ہو سکتیں، چیف جسٹس

چیف جسٹس آف پاکستان افتخار محمد چوہدری۔ فوٹو آن لائن

کراچی: چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری نے کہا ہے کہ دہشت گردی پوری دنیا کا مشترکہ مسئلہ ہے جس سے پاکستان بھی متاثر ہے، انہوں نے کہا کہ دہشت گردانہ کارروائیاں فنڈنگ کے بغیر نہیں ہو سکتیں۔

چیف جسٹس آف پاکستان نے کراچی میں سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردوں کی کاروائیاں فنڈنگ کے بغیر نہیں ہوسکتیں۔ دہشتگردوں کی فنڈنگ پر بھی نظر رکھنی چاہیے ہے خصوصاً انٹرنیٹ کے ذریعے دہشت گردوں کی فنڈنگ پر نظر رکھنے کی ضرورت ہے۔

افتخار محمد چوہدری نے کہا کہ سائبر کرائم دہشت گردی کی خطرناک قسم ہے اور اب موبائل فون بھی دھماکوں میں استعمال کیے جارہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کے ججوں نے ہر محاذ پر دہشت گردی کیخلاف آواز بلند کی۔

چیف جسٹس آف پاکستان کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کے خلاف مقدمات میں وکلا کو مشکلات کا سامنا ہے۔ دہشت گردوں کا کوئی مذہب اور عقیدہ نہیں ہوتا اور وہ صرف اپنے مقاصد کا حصول چاہتے ہیں۔

انہوں نے زور دیتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی پوری دنیا کا مشترکہ مسئلہ ہے اور نائن الیون کے بعد سے دنیا کو نئی قسم کی دہشت گردی کا سامنا ہے۔

چیف جسٹس نے کہا کہ ریاست اور ادارے بھی لسانی،مذہبی اور فرقہ وارانہ دہشت گردی کا شکار ہورہے ہیں۔ پاکستانی قوم انصاف کی سربلندی پر یقین رکھتی ہے اور دہشت گردی کیخلاف پوری قوم متحد ہے۔

اس حصے سے مزید

کراچی: پی ایس 114 میں دوبارہ انتخابات کا حکم

ایم کیو ایم کے رؤف صدیقی نے پی ایس 114 سے مسلم لیگ (ن) کے عرفان اللہ مروت کی کامیابی کو چیلنج کیا تھا۔

ممبئی حملہ کیس کی سماعت ملتوی ہونے پر ہندوستان کا احتجاج

ہندوستان نے پاکستان کے ڈپٹی ہائی کمشنر کو طلب کیا اور ممبئی حملہ کیس کی سماعت ملتوی ہونے پر احتجاج کیا۔

لاہور: تین سالہ بچی کے ساتھ ریپ کا انسانیت سوز واقعہ

نامعلوم افراد بچی کو ریپ کا نشانہ بنا کر اُسے گرین بیلٹ کے قریب پھینک کر فرار ہو گئے۔ بچی کی حالت تشویشناک ہے۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

تھوڑا سا احترام

آپ ایک مایوس، خوفزدہ بیوروکریسی سے کیا توقع کرسکتے ہیں جنہیں اپنی سمت کا علم نہ ہو؟

ایک عہد ساز فیصلہ

مذہب کا مطلب صرف بے لچک پن اور سخت گیری نہیں ہوتا، مذہبی آزادی میں ضمیر، خیالات، احساسات، عقیدہ سب شامل ہونا چاہئے-

بلاگ

گھریلو تشدد: پاکستانی 'کلچر' - حقیقت کیا ہے؟

پاکستانی سماج میں عورت مرد کی جائداد اور اس سے کمتر ہے چناچہ اس کے ساتھ کسی قسم کا سلوک روا رکھنا مرد کا پیدائشی حق ہے-

ریاستی تنہائی اور اجتماعی مہاجرت

جب تک سوچنے اور سوچ کے اظہار کے لیے ممکنہ حد تک ازادی موجود نہ ہو تب تک سماج میں تکثیریت پروان نہیں چڑھ سکتی

صحت عامہ کا بنیادی مسئلہ

سیاسی جماعتیں اپنے حامیوں کو محض نعرے لگوانے کے بجاۓ تعمیری سرگرمیوں کے لئے کیوں متحرک نہیں کرتیں؟

وزیرستان کے اکھاڑے سے

کشتی کا تو پتا نہیں اصلی ہے یا نہیں لیکن ہم نے ان پہلوانوں کو کسرت اکٹھے ہی کرتے دیکھا ہے۔