23 اگست, 2014 | 26 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

دہشت گردوں کی نشاندہی پر ایک کروڑ انعام

وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا امیر حیدر خان ہوتی جنہوں نے ملالہ پر حملہ کرنیوالوں کی نشاندہی پر انعام کا اعلان کیا ہے۔ فائل فوٹو

پشاور: وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا امیر حیدر خان ہوتی نے ملالہ یوسف زئی پر حملے میں ملوث افراد کی نشاندہی کرنے پر 1 کروڑ روپے کا اعلان کر دیا۔

ڈان نیوز کے نمائندے ظاہر شاہ کے مطابق پشاور میں میڈیا سے گفتگو میں میاں افتخار نےبتایا کہ وزیر اعلیٰ امیر حیدر خان ہوتی نے ملالہ پر حملے کے ملزم کی نشاندہی پر ایک کروڑ روپے انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملالہ کا آپریشن ہو گیا ہے، اس کی حالت پہلے سے بہتر ہے اور اسے بیرون ملک بھجوانے کی ضروت نہیں۔ آئندہ دو دن ملالہ کی صحت کے حوالے سے اہم ہیں جبکہ ان کو 48گھنٹے بے ہوش رکھا جائے گا۔

میاں افتخار کا کہنا تھا کہ ڈاکٹروں کی کمی کا تاثر غلط ہے، ہمارے پاس دنیا کے بہترین نیورو سرجن موجود ہیں جو خطے میں جاری دہشت گردی کی کارروائیوں کے باعث نیورو سرجری کے ایسے کیسز کے علاج میں مہارت رکھتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ملالہ یوسف زئی کے خاندان کو مکمل تحفظ فراہم کیا جائے گا۔

میاں افتخار کا کہنا تھا کہ صوبے کو دہشت گردی کا سامنا ہے، تمام لوگوں کو سیکیورٹی دینا مشکل ہے مگر اہم افراد کو سیکیورٹی فراہم کی گئی ہے جبکہ امن کے لئے آواز اٹھانے والوں کے لیے سیکیورٹی کے انتظامات کیے جا رہے ہیں۔

اس سے قبل وفاقی وزیر داخلہ رحمٰن ملک نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ حملہ آوروں کی شناخت ہو گئی ہے اور وہ کہیں نہیں بھاگ سکتے۔

انہوں نے کہا تھا کہ دہشت گردوں کو گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دی جائے گی۔

یاد رہے کہ منگل کو سوات میں ملالہ یوسف زئی کی اسکول بس میں ان پر حملہ کیا گیا تھا اور وہ فائرنگ سے شدید زخمی ہو گئی تھیں جبکہ ان کے ساتھ ساتھ ان کی دو سہیلیاں بھی زخمی ہوئی تھیں۔

واضح رہے کہ تحریک طالبان نے اس حملے کی ذمے داری قبول کرتےہوئے بیان دیا تھا کہ اگر ملالہ یوسف زئی بچ گئیں تو انہیں دوبارہ نشانہ بنایا جائے گا۔

اس حصے سے مزید

اورکزئی ایجنسی: امن لشکر اور شدت پسندوں میں جھڑپ، پانچ ہلاک

ذرائع کے مطابق مارے جاے والے مبینہ شدت پسند درّۂ آدم خیل میں طالبان کے مومن گروپ سے تعلق رکھتے تھے۔

مانسہرہ: ریپ کے ملزم کی جان سے مارنے کی دھمکیاں

ریپ کی شکار لڑکی نے الزام عائد کیا ہے کہ پولیس اہلکار عدالت سے باہر معاملہ طے نہ کرنے پر قتل کی دھمکیاں دے رہا ہے۔

پشاور: تیز بارش میں حادثات، 8 افراد ہلاک، 42زخمی

پشاور اور گرد ونواح میں تیزہواؤں کے ساتھ آندھی اورگردآلود طوفان شروع ہوا جس کے بعد گرج چمک کے ساتھ شدید بارش شروع ہوگئی۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

کچھ جوابات

وزیر اعظم کا اعلان کردہ کمیشن مسئلے سلجھانے کے بجائے زیادہ الجھا دے گا۔

بڑھتی مایوسی

مایوسی تب اور بڑھتی ہے جب عوام دیکھتے ہیں کہ حکمران عوامی پیسے سے اپنے کام چلانے میں شرم بھی محسوس نہیں کرتے۔

بلاگ

پکوان کہانی : شاہی قورمہ

جو اکبر اعظم کے شاہی باورچی خانے کی نگرانی میں راجپوت خانساماؤں کے تجربات کا نتیجہ ہے۔

پاکستان ایک "ساس" کی نظر سے

68 سالہ جین والر کو پاکستان بہت پسند آیا، اتنا زیادہ کہ بقول ان کے مجھے پاکستان سے محبت ہوگئی ہے۔

مووی ریویو: گارڈینز آف گیلیکسی ایک ویژول ٹریٹ ہے

جو یادوں کے ایسے دور میں لے جاتی ہے جب ایکشن کے بجائے مزاح کسی کامک کا سرمایہ اور اسے بیان کرنے کا ذریعہ ہوا کرتا تھا۔

اب مارشل لاء کیوں ناممکن؟

ایوب، ضیاء اور مشرّف، تینوں ہی مغربی قوّتوں کے جغرافیائی سیاسی کھیلوں میں اسٹریٹجک کردار کے بدلے جیتے تھے۔