17 ستمبر, 2014 | 21 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

دہشت گردوں کی نشاندہی پر ایک کروڑ انعام

وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا امیر حیدر خان ہوتی جنہوں نے ملالہ پر حملہ کرنیوالوں کی نشاندہی پر انعام کا اعلان کیا ہے۔ فائل فوٹو

پشاور: وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا امیر حیدر خان ہوتی نے ملالہ یوسف زئی پر حملے میں ملوث افراد کی نشاندہی کرنے پر 1 کروڑ روپے کا اعلان کر دیا۔

ڈان نیوز کے نمائندے ظاہر شاہ کے مطابق پشاور میں میڈیا سے گفتگو میں میاں افتخار نےبتایا کہ وزیر اعلیٰ امیر حیدر خان ہوتی نے ملالہ پر حملے کے ملزم کی نشاندہی پر ایک کروڑ روپے انعام دینے کا اعلان کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملالہ کا آپریشن ہو گیا ہے، اس کی حالت پہلے سے بہتر ہے اور اسے بیرون ملک بھجوانے کی ضروت نہیں۔ آئندہ دو دن ملالہ کی صحت کے حوالے سے اہم ہیں جبکہ ان کو 48گھنٹے بے ہوش رکھا جائے گا۔

میاں افتخار کا کہنا تھا کہ ڈاکٹروں کی کمی کا تاثر غلط ہے، ہمارے پاس دنیا کے بہترین نیورو سرجن موجود ہیں جو خطے میں جاری دہشت گردی کی کارروائیوں کے باعث نیورو سرجری کے ایسے کیسز کے علاج میں مہارت رکھتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ملالہ یوسف زئی کے خاندان کو مکمل تحفظ فراہم کیا جائے گا۔

میاں افتخار کا کہنا تھا کہ صوبے کو دہشت گردی کا سامنا ہے، تمام لوگوں کو سیکیورٹی دینا مشکل ہے مگر اہم افراد کو سیکیورٹی فراہم کی گئی ہے جبکہ امن کے لئے آواز اٹھانے والوں کے لیے سیکیورٹی کے انتظامات کیے جا رہے ہیں۔

اس سے قبل وفاقی وزیر داخلہ رحمٰن ملک نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ حملہ آوروں کی شناخت ہو گئی ہے اور وہ کہیں نہیں بھاگ سکتے۔

انہوں نے کہا تھا کہ دہشت گردوں کو گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دی جائے گی۔

یاد رہے کہ منگل کو سوات میں ملالہ یوسف زئی کی اسکول بس میں ان پر حملہ کیا گیا تھا اور وہ فائرنگ سے شدید زخمی ہو گئی تھیں جبکہ ان کے ساتھ ساتھ ان کی دو سہیلیاں بھی زخمی ہوئی تھیں۔

واضح رہے کہ تحریک طالبان نے اس حملے کی ذمے داری قبول کرتےہوئے بیان دیا تھا کہ اگر ملالہ یوسف زئی بچ گئیں تو انہیں دوبارہ نشانہ بنایا جائے گا۔

اس حصے سے مزید

خیبر پختونخوا کے مختلف علاقوں میں زلزلے کے جھٹکے

زلزلے کا مرکز کوہ ہندوکش کا علاقہ تھا جبکہ ریکٹر سکیل پر اس کی شدت 4.1 ریکارڈ کی گئی ۔

شمالی وزیرستان میں فضائی کارروائی، 40 شدت پسند ہلاک

ذرائع کے مطابق پاک فوج کی کارروائی میں غیر ملکیوں سمیت 40 شدت پسند ہلاک جبکہ شدت پسندوں کے پانچ ٹھکانے بھی تباہ ہوگئے۔

شمالی وزیرستان: فورسز کی چوکی پر حملہ ناکام، گیارہ شدت پسند ہلاک

ذرائع کے مطابق افغان سرحد کی جانب سے کیے گئے اس دہشت گرد حملے میں تین ایف سی اہلکار بھی ہلاک ہوئے ہیں۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

مزید جمہوریت

نظام لپیٹ دینے اور امپائر کی باتیں کرنے کے بجائے ہمارا مطالبہ صرف مزید جمہوریت ہونا چاہیے، کم جمہوریت نہیں۔

تبدیلی آگئی ہے

ملک میں شہری حقوق کی عدم موجودگی میں عوام اب وسیع تر بھلائی کا سوچنے کے بجائے اپنے اپنے مفاد کے لیے اقدامات کررہے ہیں۔

بلاگ

کراچی میں فرقہ وارانہ دہشتگردی

کراچی ایک مرتبہ پھر فرقہ وارانہ دہشت گردی کی زد میں ہے اور روزانہ کوئی نہ کوئی بے گناہ سنی یا شیعہ اپنی جان گنوا رہا ہے۔

اجمل کے بغیر ورلڈ کپ جیتنا ممکن

خود کو ورلڈ کلاس باؤلنگ اٹیک کہنے والے ہمارے کرکٹ حکام کی پوری باؤلنگ کیا صرف اجمل کے گرد گھومتی ہے۔

کریچر - تھری ڈی: گوڈزیلا یا ڈیوی جونز کا کزن؟

یہ کہنا غلط نہ ہوگا بپاشا ہارر تھرلرز تک محدود ہوگئی ہیں جبکہ عمران عبّاس نے انکے گرد چکر کاٹنے کے سوا کچھ نہیں کیا۔

جب خاموشی بہتر سمجھی جائے

اس بات کو تسلیم کرنا ہو گا کہ برطانوی پاکستانیوں کے پاس جنسی استحصال پر بات کرنے کے لیے آزادی نہیں ہے۔