02 ستمبر, 2014 | 6 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

عراق میں چار پاکستانی زائرین ہلاک

عراق میں ایک بم دھماکے کی فائل تصویر۔ اے پی فوٹو

بغداد: جمعے کے روز زیارت کیلئے آنے والے چار افراد اس وقت ہلاک ہوگئے جب جنوبی ایشیا کے زائرین سے بھری ہوئی ایک بس پر نامعاوم حملہ آوروں کی جانب سے بم دھماکے کے بعد  فائرنگ کردی گئی۔  ۔ اس واقعے میں گیارہ افراد زخمی بھی ہوئے۔

یہ منظم حملہ جمعرات کے دن کے اختتام پر پیش آیا اور بلاد نامی شہر میں یہ واقعہ رونما ہوا۔ طبی عملے اور سیکیورٹی اہلکاروں کے مطابق ہلاک ہونے والے چاروں افراد کا تعلق پاکستان سے ہے جبکہ پاکستانی سفارتخانے سے فوری طور پر اس کی تصدیق نہیں ہوسکی۔

بلاد کے مرکزی دروازے پر روڈ کیساتھ نصب بم پھٹا اور اس سے پہلے کہ وہ بس آگے بڑھتی حملہ آوروں نے اس پر فائرنگ کردی۔ بلاد کے ایک پولیس لیفٹننٹ اورایک ڈاکٹر کے مطابق چار زائرین ہلاک ہوئے ہیں جن کا تعلق پاکستان سے ہے اور اس حملے میں گیارہ افراد بھی زخمی ہوئے ہیں۔ ہلاک شدگان میں سب مرد شامل ہیں۔،

عراق میں کئی ایسے مقدس مقامات ہیں جہاں دنیا بھر سے شیعہ مسلمان زیارت کیلئے آتے ہیں لیکن اکثر انہیں سنی شدت پسندوں کی جانب سے نشانہ بھی بنایا جاتا ہے۔

عراق میں دوہزار چھ اور دوہزار سات میں تشدد عروج پر تھا جس میں دسیوں ہزاروں افراد لقمہ اجل بنے تھے تاہم عراق میں اب بھی بم دھماکے اور فائرنگ کے واقعات عام ہیں۔

اس حصے سے مزید

عراق: داعش کے ہاتھوں ایک ماہ میں 1420 لوگ ہلاک

اقوام متحدہ کے ڈیٹا کے مطابق عراق میں تشدد کے واقعات میں جولائی میں 1737 جبکہ جون میں 2400 لوگ ہلاک ہوئے ہیں۔

سری لنکا میں پاکستانی پناہ گزینوں کو واپسی کی اجازت

سری لنکن حکومت نے پاکستانی پناہ گزینوں کو ملک کی سلامتی اور صحت عامہ کیلئے سنگین مسئلہ قرار دیا تھا۔

چین: چھری کے وار سے تین بچے قتل

حملہ آور نے یہ اقدام اپنی بیٹی کے نئے سمسٹر کورس میں اسکول کے اندراج سے انکار کی بنا پر کیا۔


تبصرے بند ہیں.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

احتیاطی نظربندی کا غلط قانون

فوجی اور سویلین حکومتوں نے باقاعدگی سے احتیاطی نظربندی کو اپنے مخالفین کو خاموش کرنے اوردھمکانے کے لیے استعمال کیا ہے۔

توجہ طلب شعبہ

بجلی کی لائنیں لگانے اور مرمت کرنے کو دنیا کے دس خطرناک ترین پیشوں میں شمار کیا جاتا ہے-

بلاگ

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔

تاریخ کی تکرار

پولیس پر تشدد اور دہشت گردی کا الزام لگانے والے کیا اپنے گھروں پر کسی ایرے غیرے نتھو خیرے کو چڑھائی کی اجازت دیں گے؟

آبی مسائل کا ذمہ دار ہندوستان یا خود پاکستان؟

پاکستان میں پانی اور بجلی کے بحران کی وجہ پچھلے 5 عشروں سے پانی کے وسائل کی خراب مینیجمنٹ ہے۔

نوازشریف: قوت فیصلہ سے محروم

نواز شریف اپنے بادشاہی رویے کی وجہ سے پھنس چکے ہیں، جو فیصلے انہیں چھ ماہ پہلے کرنے چاہیے تھے وہ آج کر رہے ہیں۔