02 ستمبر, 2014 | 6 ذوالقعد, 1435
ڈان نیوز پیپر

پاکستان آل اسٹارالیون کی انٹرنیشنل ورلڈ الیون کیخلاف کامیابی

ہفتہ کے روز کرچی کے نیشنل اسٹیدیم میں کھیلے جانے والے میچ کا ایک منظر۔ – اے ایف پی فوٹو

کراچی: ساڑھے تین سال کے صبر آزما انتظار کے بعد بالآخر پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی ہو گئی۔ پاکستان آل اسٹار الیون نے انٹرنیشنل ورلڈ الیون کو پہلے ٹی ٹوئنٹی میچ میں چوراسی رنز سے ہرا دیا۔

ہفتہ کے روز کرچی کے نیشنل اسٹیدیم میں کھیلے جانے والے میچ میں پاکستان آل اسٹار الیون کے بیٹسمینوں نے چوکوں اور چھکوں کی بارش کردی۔

اوپنر شاہ زیب حسن اورعمران نذیر اور مڈل آرڈر بیٹسمین عمر اکمل نے انٹرنیشنل الیون کے بالرز کی گیندوں کا جارحانہ انداز میں سامنا کیا اور مقررہ اوورز میں سات وکٹوں کے نقصان پر دو سو بائیس رنز اسکور کئے۔

شائقین کی ایک بڑی تعداد میچ دیکھنے کیلئے اسٹیڈیم میں موجود تھی جو پاکستان کی بیٹنگ کے دوران لگنے والے ہر چوکے اور چھکے پر بھرپور داد دیتے نظر آئے۔

پاکستان الیون کی جانب سے عمر اکمل سڑسٹھ رنز کے ساتھ ناقابل شکست رہے۔ جبکہ انٹرنیشنل الیون کے شابالالا بیس رنز کے عوض تین وکٹیں حاصل کرنے میں کامیاب رہے۔

ہدف کے تعاقب میں انٹرنیشنل الیون کا کوئی بھی بیٹسمین پاکستانی بالنگ اٹیک کا جم کر سامنا نہ کرسکا۔ کپتان جے سوریا پہلے ہی اوور آؤٹ ہو گئے جس کے بعد اسٹیون ٹیلر، محمد شہزاد اور رکارڈو پاول بھی جلد ہی اپنی وکٹیں گنوابیٹھے۔ مقرررہ اوورز میں انٹرنیشنل الیون کی ٹیم آٹھ وکٹوں پرصرف ایک سو اڑتیس رنز ہی بنا سکی۔

تابش خان نے اننگز کے ساتویں اوور میں ہیٹ ٹرک کی جب کہ وہاب ریاض دو وکٹیں لینے میں کامیاب رہے۔

اس حصے سے مزید

آسٹریلیا کو زمبابوے کے ہاتھوں اپ سیٹ شکست

زمبابوے نے سہ ملکی سیریز میں آسٹریلیا کو تین وکٹوں سے اپ سیٹ شکست دے کر 31 سال میں پہلی کامیابی حاصل کرلی۔

تیسرا ون ڈے، سری لنکا نے پاکستان کو شکست دے دی

پاکستان کی جانب سے دیئے گئے 103 رنز کے ہدف کو سری لنکن ٹیم نے تین وکٹوں کے نقصان پر باآسانی حاصل کرلیا۔

پاکستان اور سری لنکا کا فیصلہ کن معرکہ ہفتے کو

آف اسپنر سعید اجمل کی دستیابی مصباح الحق اور ٹیم مینجمنٹ کے حوصلہ کو بلند کرے گی۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Husnain Arif Gailani
21 اکتوبر, 2012 07:05
salam . i like your links but muje ye site aj mili hai. khair thank you very much.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

ماڈل ٹاؤن کیس: کچھ حماقتیں

حکمرانوں کے منع کرنے پر پولیس کی جانب سے مقتولین کی ایف آئی آر درج کرنے میں تاخیر کی وجہ سے معاملہ مزید خراب ہوا۔

بیوروکریٹس کی یونین

ذاتی مفادات کے لیے چوری چھپے سیاسی ہونے سے زیادہ بہتر ہے کہ ریاست کے وسیع تر مفاد کے لیے کھلے عام سیاسی ہوا جائے۔

بلاگ

ڈرامہ ریویو: 'لا' (الجھتے رشتوں کی کہانی)

ڈرامہ پرفیکٹ نہیں بھی تھا تو بھی یہ ان ڈراموں میں سے ایک ضرور تھا جسے دیکھ کر بیزاری کا احساس نہیں ہوتا۔

مووی ریویو : 'راجہ نٹور لال' سٹیریو ٹائپنگ کا شکار ہوگئی

یہ فلم نہ تو مزاح پر پوری اترتی ہے اور نہ ہی اس میں اتنا تھرلر ہے جو اسے ذہن میں نقش کر دے۔

سستا خون: براۓ انقلاب

"انقلاب" سیاست چمکانے کے لیے ایک خوشنما لفظ بن چکا ہے، اور اسے مزید چمکانے کے لیے کارکنوں کا سستا خون بھی دستیاب ہے۔

سیاست اور اخلاقیات

پتہ نہیں وہ کون سے ملک یا قومیں ہوتی ہیں جن کے عہدیدار کسی بھی ناکامی کی صورت میں فوراً اپنے عہدے سے مستعفی ہوجاتے ہیں۔