21 اپريل, 2014 | 20 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

رمشاء مسیح کے خلاف درج مقدمہ خارج کرنے کا حکم

رمشہ لو لے جاتے ہوئے۔ اے ایف پی فوٹو

اسلام آباد: اسلام آباد ہائی کورٹ نے رمشاء مسیح کے خلاف مقدس اوراق کی توہین کیے جانے سے متعلق درج کی جانے والی ایف آئی آر خارج کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

رمشاء مسیح کیس کی سماعت کے موقع پر اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اقبال حمید الرحمن نے پولیس کو رمشاء مسیح کے خلاف درج ایف آئی آر خارج کرنے کا حکم دیا۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ رمشاء مسیح پرقرآنی اوراق جلانے کا الزام لگایا گیا تھا، تاہم کسی نے رمشاء کو مقدس اوراق کی توہین کا مرتکب ہوتے نہیں دیکھا۔

چشم دید گواہ سامنے نہ آنے پر اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس نے پولیس کو حکم دیا کہ رمشاء مسیح کےخلاف مقدس اوراق نذرآتش کیے جانے سے متعلق درج ایف آئی آر فوری طور پر خارج کی جائے۔

واضح رہے کہ اسلام آباد کے نواحی گاؤں کی رہائشی رمشا کو سولہ جولائی کو ایک مقامی شخص کی شکایت پر پولیس نے توہین مذہب کے قانون کے تحت گرفتار کیا تھا۔

سات ستمبر کو عدالت نے رمشا کو پانچ پانچ لاکھ کے دو مچلکوں پر اڈیالہ جیل سے ضمانت پررہا کرنے کا حکم دیا۔

آٹھ ستمبر رہائی کے بعد رمشا کو سخت حفاظتی نگرانی میں نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا تھا۔

اس حصے سے مزید

وزیرِ اعظم نے حامد میر حملے کی جوڈیشل تحقیقات کا حکم دیدیا

کمیشن کیلئے سپریم کورٹ سے درخواست کی جائے گی، قاتلوں کی اطلاع پر ایک کروڑ روپے انعام کا اعلان۔

آئی ایم ایف اسٹیٹ بینک کی خودمختاری کے بل سے غیرمطمئن

آئی ایم ایف مشن کے سربراہ نے ڈان کوبتایا کہ آئی ایم ایف کو اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ترمیمی ایکٹ میں کچھ تحفظات ہیں۔

پرویز مشرف کراچی پہنچ گئے

پرویز مشرف کا طیارہ کراچی ایئرپورٹ لینڈ کرگیا جہاں ان کی آمد کے پیش نظر سخت سیکورٹی اقدامات کیے گئے ہیں۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Riyaz
30 جون, 2013 19:02
كیا میں پوچ سكتا ہوں كہ وہ امام جو اس لڑكی پر جہوتا الزام لگایا تہا ، مطلب حافظ محمد خالد چشتی كو كیا ہوا ؟ وہ اب كہاں ہے؟ اور كیا كر رہا ہے ؟ اور كس اور بیگناہ پر الزام لگانا چاہتا ہے ؟ كیا اس كو اس كی جہوت كی الزام كی سزا ملے گی كہ نہیں ؟ كیا اس جہوتا امام ابہی بہی كسی مسجد میں نماز اور خطبہ دیتا ہے كہ نہیں ؟ اللہ ہم كو ایسا جہوتا اماموں سے بچا كے ركہے
مقبول ترین
بلاگ

دنیاۓ صحافت: داستاں تک بھی نہ ہوگی داستانوں میں

ایک فوجی کی طرح صحافی کو بھی ہرگز اکیلا نہیں چھوڑا جاسکتا، یہ سوچنا کہ یہ ہماری جنگ نہیں، سراسر حماقت ہے-

2 - پاکستان کی شہری تاریخ ... ہمیں سب ہے یاد ذرا ذرا

بھٹو حکومت کے ابتدائی سالوں میں قوم کا مزاج یکسر تبدیل ہو گیا تھا، کیونکہ ملک ایک نئے پاکستان کی طرف بڑھ رہا تھا-

سچ، گولی اور بے بس جرنلسٹ

حامد میر پر حملہ ایک بار پھر صحافی برادری کی بے بسی کی طرف اشارہ کرتا ہے

دو قومی نظریہ اور ہندوستانی اقلیتیں

دو قومی نظریہ مسلمانوں اور ہندوؤں میں تو تفریق کرتا ہے لیکن دیگر اقلیتوں، خاص کر دلتوں کو یکسر فراموش کرتا ہے۔