17 اپريل, 2014 | 16 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

'افغان انٹیلی جنس سربراہ پر حملہ کا منصوبہ پاکستان میں بنا'

File picture shows Afghanistan's Intelligence Chief Khalid speaking to the media in the Arghandab district of Kandahar province
افغان نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکورٹی کے سربراہ اسد اللہ خالد۔—رائٹرز

کابل: صدر حامد کرزئی نے الزام لگایا ہے کہ افغان انٹیلی جنس کے سربراہ اسد اللہ خالد پرحملہ کی منصوبہ بندی پاکستان کے شہر کوئٹہ میں کی گئی۔

نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکورٹی(این ڈی ایس) کے سربراہ خالد پر جمعرات کو کابل کے  وسطی علاقے تائیمان میں خود کش حملہ کیا گیا تھا۔

حملے کے بعد گزشتہ روز خالد کو بگرام میں امریکی فوجی ہسپتال منتقل کردیا گیا تھا، جہاں ان کی حالت خطرے سے باہر بتائی جاتی ہے۔

ہفتہ کو ایک پریس کانفرنس سے بات چیت میں کرزئی نے پاکستان پر براہ راست الزام لگانے سے گریز کیا تاہم ان کا کہنا تھا کہ وہ اس معاملے پر اسلام آباد سے بات کریں گے۔

افغان طالبان نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی تھی لیکن کرزئی کا کہنا ہے کہ عسکریت پسند کابل کے وسط میں اس طرح کی کارروائی نہیں کر سکتے۔

افغان صدر کا کہنا تھا کہ 'بظاہر دوسرے حملوں کی طرح اس کی ذمہ داری طالبان نے قبول کی ہے لیکن اپنے جسم کے اندر بارودی مواد چھپا کر اس طرح کی پیچیدہ کارروائی ان کی نہیں ہو سکتی'۔

' یہ انتہائی مہارت سے کیا گیا حملہ ہے۔۔۔۔ طالبان ایسا نہیں کر سکتے ، اس کے پیچھے کوئی بڑا اور منظم ہاتھ ملوث ہے'۔

افغان صدر نے کہا کہ وہ یہ معاملہ ترکی میں پاکستانی حکام سے ملاقات کے دوران اٹھائیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ 'یہ ایک اہم مسئلہ ہے اور ہم امید کرتے ہیں کہ پاکستانی حکومت ہمیں اس حوالے سے درست معلومات دینے کے علاوہ سنجیدگی سے تعاون کرے گی تاکہ ہمارے خدشات ختم ہو سکیں'۔

اس حصے سے مزید

افغان انتخابات: ابتدائی نتائج میں عبداللہ عبداللہ پہلے نمبر پر

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری ان نتائج کے مطابق اشرف عنی دوسرے اور زلمے رسول تیسرے نمبر پر ہیں۔

افغان صدارتی انتخابات کے بعد ووٹوں کی گنتی جاری

پاکستان سمیت دنیا بھر نے افغانستان میں صدارتی انتخابات کی تکمیل کا خیرمقدم۔

پرامن افغان صدارتی انتخابات ختم، بھاری ٹرن آؤٹ متوقع

امریکی صدر باراک اوباما نے افغان عوام کو انتخابات میں بڑی تعداد میں شرکت پر مبارکباد دیتے ہوئے تاریخی سنگ میل قرار دیا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے

ٹی ٹی پی نہیں تو پھر مذاکرات کیوں؟

عام آدمی کو صرف تحفظ چاہئے اور اگر مذاکرات یہ نہیں دے رہے تو ان کو مزید آگے بڑھانے سے کیا حاصل؟

جادو کا چراغ: نبض کے بھید اور ایک برباد محبت

بوڑھے دانا طبیب نے مختلف ناموں پر بدلتی نبض کو دیکھ کر لڑکی کی پراسرار بیماری کا علاج کیا-

سارے جہاں سے مہنگا - ریویو

فلم میں ایک اچھوتا خیال پیش کیا گیا ہے کہ کس طرح 'جگاڑ' کر کے ایک مڈل کلاس آدمی مہنگائی کا توڑ نکالتا ہے۔