16 اپريل, 2014 | 15 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

ہزارہ برادری کو تحفظ دیا جائے،الطاف حسین

 - اے پی پی فوٹو
- اے پی پی فوٹو

کراچی:  متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے قائد الطاف حسین نے وزیراعظم راجہ پرویز اشرف اور وفاقی وزیرداخلہ رحمان ملک سے ٹیلیفونک رابطہ کیا ہے۔

ڈان نیوز کے مطابق، ہفتہ کو الطاف حسین نے وزیراعظم راجہ پرویز اشرف اور وزیرداخلہ رحمن ملک سے بات کرتے ہوئے کہا کہ کوئٹہ میں ہزارہ کمیونٹی کے لوگوں کا مسلسل قتل عام کیا جارہا ہے لیکن انہیں تحفظ فراہم کرنے والا کوئی نہیں ہے بم دھماکوں اور دہشت گردی کے واقعات میں 100 افرادکی ہلاکت پر کوئی حکومتی شخصیت متاثرین سے اظہار ہمدردی کیلئے نہیں پہنچی۔

وزیراعلیٰ بلوچستان ملک سے باہر اور وزراء غائب ہیں، ہزارہ کمیونٹی کے افراد اپنے پیاروں کی میتیں سڑک پر رکھ کر سخت سردی اور بارش کے باوجود رات بھر احتجاج کرتے رہے۔

ایم کیو ایم کے قائد نے کہا کہ جان و مال کا تحفظ فراہم کیا جائے لیکن یہ امر افسوسناک ہے کہ صوبائی حکومت نے اس پر بالکل بھی کوئی توجہ نہیں دی اور مسئلے کا حل نکالنے کی کوئی کوشش نہیں کی۔

انہوں نے وزیراعظم اور وفاقی وزیرداخلہ سے کہا کہ اگر صوبائی حکومت اور صوبائی اسمبلی اس مسئلے کو حل نہیں کرسکتی تو اس مسئلے کا متبادل حل نکالا جائے۔

الطاف حسین نے مزید کہا کہ اتنے بڑے سانحہ پر مسلسل بے حسی کا مظاہرہ کرنے پر حکومت بلوچستان سے پوچھا جائے۔

اس حصے سے مزید

خیرپور میں گیس پائپ لائن دھماکے سے تباہ

پولیس کے مطابق دھماکے کے بعد سندھ کے مختلف شہروں میں گیس کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔

الطاف حسین نفرت اور تفریق ختم کرنے کے خواہاں

ایم کیو ایم کے قائد نے کہا کہ سندھی عوام کو اپنے حقوق کے لیے ایک ہو کر متحرک ہونا پڑے گا۔

'جمہوریت کو خطرہ ہوا تو وزیر اعظم کا ساتھ دینگے'

قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈرخورشید شاہ نے کہاہے کہ جمہوریت یاحکومت کو کوئی خطرہ نہیں، اگر ہوا تو وزیر اعظم کاساتھ دینگے۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

میڈیا کے چٹخارے

پاکستانی میڈیا کو جتنی زیادہ آزادی ہے اسکی اپروچ اتنی ہی جانبدارانہ ہے، عوام کی پولرائزیشن میں میڈیا کا بہت بڑا ہاتھ ہے

ٹی ٹی پی نہیں تو پھر مذاکرات کیوں؟

عام آدمی کو صرف تحفظ چاہئے اور اگر مذاکرات یہ نہیں دے رہے تو ان کو مزید آگے بڑھانے سے کیا حاصل؟

جادو کا چراغ: نبض کے بھید اور ایک برباد محبت

بوڑھے دانا طبیب نے مختلف ناموں پر بدلتی نبض کو دیکھ کر لڑکی کی پراسرار بیماری کا علاج کیا-

سارے جہاں سے مہنگا - ریویو

فلم میں ایک اچھوتا خیال پیش کیا گیا ہے کہ کس طرح 'جگاڑ' کر کے ایک مڈل کلاس آدمی مہنگائی کا توڑ نکالتا ہے۔