26 جولائ, 2014 | 27 رمضان, 1435
ڈان نیوز پیپر

ہم اسمبلیاں تحلیل کر سکتے ہیں، چوہدری نثار

قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور مسلم لیگ نواز کے سینئر رہنما چوہدری نثار۔ فائل فوٹو آن لائن۔۔۔

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری نثار نے کہا ہے کہ نئے صوبے کسی مخدوم کی نہیں بلکہ عوام کی مرضی سے بنیں گے، اسمبلیاں تحلیل کرنے کی کنجی مسلم لیگ ن کے پاس ہے۔

پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چودھری نثار کا کہنا تھا کہ جنوبی پنجاب اور بہاولپور کے عوام کی مرضی سے صوبے بنیں گے اور مسلم لیگ ن دونوں صوبے بننے کے حق میں ہے لیکن یہ نعروں سے نہیں آئین اور قانون کے مطابق بنیں گے۔

چوہدری نثار نے کہا کہ پیپلزپارٹی اور اس کے اتحادی صوبے بنانے میں دلچسپی نہیں رکھتے اور یہ صرف الیکشن میں ایشو بنانا چاہتے ہیں۔

چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ نگران سیٹ اپ کیلیے دو ماہ سے مختلف جماعتوں سے مشاورت جاری ہے اور اب ہم منطقی انجام تک پہنچنے والے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ صرف وفاق کے حوالے سے دو نام نہیں دیں گے بلکہ تمام صوبوں کے لیے بھی دو نام دیے جائیں گے۔

قائد حزب اختلاف نے کہا کہ طاہر القادری کی جانب سے اسمبلیاں تحلیل کرنے کے مطالبے کے حوالے سے سوال پر کہا کہ اسمبلیاں تحلیل کرنے کی کنجی صرف مسلم لیگ ن کے پاس ہے۔

چودھری نثار کا کہنا تھا کہ طاہر القادری کے ساتھ معاہدے کو تسلیم نہیں کرتے، اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ ن لیگ کو تشویش ہے کہ الیکشن کو ملتوی کرنے کی سازش ہو رہی ہے۔

اس حصے سے مزید

عمران خان بھی فلسطینیوں کے حق میں بول پڑے

اقوامِ متحدہ کے سیکریٹری جنرل کو خط میں انہوں نے کہا کہ عالمی ادارہ فلسطینیوں کی ہلاکت پر خاموش تماشائی بنا ہوا ہے۔

پیپلز پارٹی کی اسلام آباد فوج کے حوالے کرنے کی مخالفت

فرحت اللہ بابر نے کہا ہےکہ حکومتی فیصلے سے سنگین نتائج آسکتے ہیں،اس سے اخذ کیا جائے گا کہ سول انتظامیہ ناکام ہو گئی

انتخابی اصلاحات کے حوالے سے 33رکنی کمیٹی تشکیل

پاکستان تحریک انصاف سمیت تمام جماعتوں کے ارکان شامل ہیں، سینیٹ سے11 اور قومی اسمبلی سے 22 ارکان کمیٹی کے ارکان ہوں گے۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

Salman Ahmed
23 جنوری, 2013 02:51
Ch. Sahb kuch iss quom par raham karo. If you have strong links with the army generals please do not hype. This nation has already suffered squarely from the general's rules with the help of your kind of stooges. Please just talk of democracy if you have any believe in it.
سروے
مقبول ترین
قلم کار

تھوڑا سا احترام

آپ ایک مایوس، خوفزدہ بیوروکریسی سے کیا توقع کرسکتے ہیں جنہیں اپنی سمت کا علم نہ ہو؟

ایک عہد ساز فیصلہ

مذہب کا مطلب صرف بے لچک پن اور سخت گیری نہیں ہوتا، مذہبی آزادی میں ضمیر، خیالات، احساسات، عقیدہ سب شامل ہونا چاہئے-

بلاگ

گھریلو تشدد: پاکستانی 'کلچر' - حقیقت کیا ہے؟

پاکستانی سماج میں عورت مرد کی جائداد اور اس سے کمتر ہے چناچہ اس کے ساتھ کسی قسم کا سلوک روا رکھنا مرد کا پیدائشی حق ہے-

ریاستی تنہائی اور اجتماعی مہاجرت

جب تک سوچنے اور سوچ کے اظہار کے لیے ممکنہ حد تک ازادی موجود نہ ہو تب تک سماج میں تکثیریت پروان نہیں چڑھ سکتی

صحت عامہ کا بنیادی مسئلہ

سیاسی جماعتیں اپنے حامیوں کو محض نعرے لگوانے کے بجاۓ تعمیری سرگرمیوں کے لئے کیوں متحرک نہیں کرتیں؟

وزیرستان کے اکھاڑے سے

کشتی کا تو پتا نہیں اصلی ہے یا نہیں لیکن ہم نے ان پہلوانوں کو کسرت اکٹھے ہی کرتے دیکھا ہے۔