23 اپريل, 2014 | 22 جمادی الثانی, 1435
ڈان نیوز پیپر

کامران فیصل نے خود کشی کی، فرانزک رپورٹ

۔ —اے پی فوٹو
۔ —اے پی فوٹو

اسلام آباد: اطلاعات کے مطابق رینٹل پاور کیس کی تحقیقات کرنے والے قومی احتساب بیورو کے افسر کامران فیصل کی موت پر کیمیکل (فرانزک) رپورٹ اسلام آباد پولیس کو موصول ہو چکی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ رپورٹ نے خود کشی کو کامران فیصل کی موت کی وجہ قرار دیا ہے۔

کہا جا رہا ہے کہ فیصل کے والد عبدالحمید نے رپورٹ کو مسترد کرتے ہوئے اسے پیر کو سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا ارادہ کیا ہے۔

متعلقہ پولیس افسر نے ڈان سے گفتگو میں رپورٹ کے موصول ہونے یا نہ ہونے کی تصدیق سے انکار کیا ہے۔

ایک پولیس افسر نے نام نہ ظاہر کرنے پر بتایا کہ: ‘‘رپورٹ میں گردن کی ٹوٹی ہڈیوں کا ذکر ہے جو خودکشی کی نشاندہی کرتی ہے۔  ’’

انہوں نے رپورٹ کے حوالے سے مزید بتایا کہ 'مرحوم کے جسم پر کسی قسم کے تشدد یا زخم کے نشان کا ذکر نہیں تاہم یہ ضرور کہا گیا ہے کہ دم گھٹنے سے ان کی آنکھیں باہر آ گئی تھیں'۔

رپورٹ کے مطابق، کامران فیصل خود کشی کے لیے ذہنی طور پر تیار تھے کیوں کہ انہوں نے واقعہ سے نو گھنٹے پہلے تک کچھ بھی نہیں کھایا پیا تھا۔

'کامران کو پتہ تھا کہ چونکہ ان کی لاش کئی گھنٹوں بعد ملے گی لہٰذا اُن کا معدہ خالی ہونا چاہیے'۔

پولیس افسر نے رپورٹ کے حوالے سے مزید بتایا کہ مرحوم شدید ڈپریشن کا شکار تھے اور وہ اس کے لیے دوائیں بھی لے رہے تھے۔

سیکریٹریٹ تھانے کے ایک اور پولیس اہلکار نے نام نہ ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا کہ ساجد نامی ایک شخص فیڈرل لاجز میں فیصل کامران کے کمرہ میں رہ رہا تھا اور وہ واقعہ سے دو دن پہلے چھٹی پر گیا تاہم اب تک اس کی واپسی نہیں ہوئی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ 'ہمیں پتہ چلا ہے کہ رپورٹ میں خود کشی کی تصدیق کی گئی ہے، لہٰذا اب ہم تفتیش کے حوالے تذبذب کا شکار ہیں'۔

انہوں نےبتایا کہ ساجد سے تفتیش اعلیٰ افسران کی ہدایات کے بعد ہی کی جائے گی۔

خیال رہے کہ سپریم کورٹ کے ججوں  جسٹس جواد ایس خواجہ اور جسٹس خلجی عارف پر مشتمل دو رکنی بینچ نے متعلقہ کیس میں نیب کے چیئرمین فصیح بخاری، اسلام آباد کے انسپکٹر جنرل اور پولی کلینک کے میڈیکل سپریٹنڈنٹ کو نوٹس جاری کر رکھے ہیں۔

بینچ نے آج (پیر سے) شروع ہونے والی سماعت کے لیے کیس کا ریکارڈ بھی طلب کر رکھا ہے۔

اس حصے سے مزید

جیو کیخلاف حکومتی درخواست پر جائزہ کمیٹی قائم

کمیٹی پیمرا کے ممبران پرویز راٹھور، اسرار عباسی اور اسماعیل شاہ پر مشتمل، حتمی فیصلہ پیمرا بورڈ کے اجلاس میں ہوگا۔

اسلام آباد میں کچی آبادیوں پر کریک ڈاؤن

اسلام آباد کی قریب ایک درجن کے قریب کچی آبادیوں کے خلاف دارالحکومت کی انتظامیہ کی کارروائی جاری ہے۔

کے پی حکومت بایومیٹرک سسٹم کے مطالبے سے دستبردار

بایومیٹرک سسٹم کے استعمال کے فیصلے سے مقامی حکومتوں کے انتخابات میں غیرمعینہ مدت کی تاخیر کا خدشہ تھا۔


تبصرے بند ہیں.
مقبول ترین
بلاگ

!مار ڈالو، کاٹ ڈالو

مجھے احساس ہوا کہ مجھے اس پر شدید غصہ آ رہا ہے اور میں اسے سچ بولنے پر چیخ چیخ کر ڈانٹنا چاہتا ہوں-

خطبہء وزیرستان

کس سازش کے تحت 'آپکو' بدنام کرنے کے لئے دھماکے کیے جاتے ہیں؟ کس صوبے کے مظلوم عوام آپکے بھائی ہیں؟

مووی ریویو: ٹو اسٹیٹس

عالیہ بھٹ کی بے ساختہ اداکاری نے اپنے اب تک بے شمار مداح پیدا کرلئے ہیں حالانکہ یہ ان کی تیسری فلم ہے۔

بیچارے مولانا حالی اور صحافت

'صحافت' لفظ کی طاقت کا بے جا استعمال نہیں بلکہ محرومیت کے شکار لوگوں کو طاقت بخشنا ہے