29 جولائ, 2014 | 1 شوال, 1435
ڈان نیوز پیپر

ایدھی کو طالبان سے 'خطرہ' لاحق

عبدل ستار ایدھی۔ ڈان ڈاٹ کام فوٹو

کراچی: پاکستان کے مایہ ناز سماجی کارکن عبدالستار ایدھی کو طالبان کے جانب سے مبینہ خطرے کے پیش نظر ہمّہ وقت سیکیورٹی فراہم کر دی گئی ہے ۔

ایک سرکاری عہدے دار نے خبر رساں ادارے کو نام نہ ظاہر کی شرط پر بتایا کہ ایدھی کو تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کی جانب سے خطرہ لاحق ہے، وہ انہیں اغوأ کرکے ان کے بدلے عسکریت پسندوں کو چھڑانا چاہتے ہیں۔

عہدے دار نے مزید بتایا کہ ایدھی کو پانچ جون سے دو مسلح پولیس اہلکارفراہم کر دیئے گئے ہیں۔

ایک سینئر پولیس افسر اسلم خان نے بتایا کہ  ہٹ لسٹ پر مشتمل ایک خط پکڑا گیا تھا جس میں ایدھی کےساتھ ساتھ دو پولیس افسران کے نام بھی شامل تھے جن میں وہ خود بھی ہیں۔

پچاسی سالہ ایدھی نے کہا کہ انھوں نے سیکیورٹی کو قبول تو کرلیا ہے لیکن وہ فلاحی کام جاری رکھے ہوئے ہیں ۔

ایدھی کے بیٹے فیصل کے مطابق طالبان چھ جون کو ان کے والد سے ملنے ان کے دفتر آئے تھے اور انہیں یقین دہانی کروائی تھی کہ وہ ان کا ہدف نہیں ہیں۔

فیصل نے کہا کہ طالبان نے ان کے والد کو قابلِ احترام  قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ وہ ان کے فلاحی کاموں کی قدر کرتے ہیں ۔

اس حصے سے مزید

منی لانڈرنگ کیس: الطاف حسین کی ضمانت میں توسیع

لندن پولیس نے منی لانڈرنگ کیس میں ایم کیو ایم سربراہ کی ضمانت میں دسمبر، 2014 تک توسیع کر دی۔

کراچی: لیاقت علی خان کے بیٹے انتقال کر گئے

اشرف علی خان اپنے والد کی وفات کے وقت محض 14 برس کے تھے، اُن کو کراچی میں سپرد خاک کیا جا ئے گا۔

کراچی: جمشید ٹاؤن تھانے کے قریب بم ناکارہ بنا دیا گیا

حکام کا کہنا ہے کہ پانچ کلو وزنی دھماکا خیز مواد ایک موٹر سائیکل میں نصب تھا، جسے ناکارہ بنایا دیا گیا۔


تبصرے بند ہیں.

تبصرے (1)

جاوید اقبال
18 جون, 2012 20:47
کمال ہے ایدھی صاحب کو ١٩٨٨ میں بھی انٹیلیجنس ایجنسیوں نے یہی کہکر ڈرایا اور اس کی خوب تشہیر بھی کی تھی
سروے
مقبول ترین
قلم کار

جنگ اور ہوائی سفر

پرواز کرنے کا معجزہ، جو انسانی ذہانت کا خوشگوار مظہر ہے، انسان کے انتقامی جذبات اور خون کی پیاس کی نذر ہوگیا ہے

تھوڑا سا احترام

آپ ایک مایوس، خوفزدہ بیوروکریسی سے کیا توقع کرسکتے ہیں جنہیں اپنی سمت کا علم نہ ہو؟

بلاگ

ترغیب و خواہشات: رمضان کا نیا چہرہ؟

کسی مقامی رمضان ٹرانسمیشن کو لگائیں اور وہ سب کچھ جان لیں جو اب اس مقدس مہینے کے نئے چہرے کو جاننے کے لیے ضروری ہے

نائنٹیز کا پاکستان -- 1

ضیا سے مشرف کے بیچ گیارہ سال میں کبھی کرپشن کے بہانے تو کبھی وسیع تر قومی مفاد کے نام پر پانچ جمہوری حکومتیں تبدیل ہوئیں

ٹوٹے برتن

امّی کا خیال ہے کہ ایسے برتن پورے گاؤں میں کسی کے پاس نہیں۔ وہ تو ان برتنوں کو استعمال کرنے ہی نہیں دیتی

مجرم کون؟

کچھ چیزیں ڈنڈے کے زور پہ ہی چلتی ہیں، پھر آہستہ آہستہ عادت اور عادت سے فطرت بن جاتی ہیں۔